منگل کے خاص اعمال و دعائیں

Tue, 01/11/2022 - 05:58
منگل کی دعا

ہفتے کے ہر دن اور ایام کیلئے خاص اعمال اور دعائیں منقول ہوئی ہیں کہ جن کا انجام دینا اور انہیں پڑھنا ، عظیم ثواب کا سبب ہے ۔

منگل (Tuesday) کا شمار ہفتے کے خاص ایام میں ہوتا ہے ، ایسا دن جو ہمیں زیارت توسل اور ایران میں مقیم افراد کو مسجد جمکران کی زیارت کو یاد دلاتا ہے، اس دن امام زمانہ (عج) کی مخصوص نماز اور بہت ساری دیگر مفید دعائیں کی جو حاجتوں کے پورے ہونے میں اہم کردار ادا کرتی ہیں ، کا دن ہے ۔

منگل کے دن کے خاص اعمال :

۱. نماز

۲. دعا

۳. تسبیح

۴. مخصوص ذکر

۵. استغفار

۶. استخاره کی مناسب گھڑی

۷. دعائے توسل

۸: حضرت زین العابدین ، امام محمد باقر اور امام جعفر صادق علیہم السلام کی زیارت

منگل کے دن کی خاص نماز

امام حسن عسکری (ع) سے روایت ہے کہ جو کوئی بھی منگل کے روز چھ رکعت نماز ادا کرے اور ہر رکعت میں سورہ حمد کے بعد آیت «آمَنَ الرَّسُولُ» کو اخر تک اور ایک مرتبہ سورہ «إِذٰا زُلْزِلَتِ» پڑھے ، خداوند متعال اس کی گناہوں کو بخش دے گا اور اس طرح گناہوں سے پاک ہوجائے گا جیسے ماں کے پیٹ سے پیدا ہوا ہو ۔

روای نے حضرت (ع) سے سوال کیا کہ دن کے کس حصہ میں اس نماز کو ادا کیا جائے ؟ تو حضرت نے جواب دیا کہ طلوع آفتاب سے لیکر ظھر کے وقت تک ۔ (۱)  

منگل کے دن کی خاص دعا

بِسْمِ اللهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِیمِ

الْحَمْدُ للهِ وَ الْحَمْدُ حَقُّهُ کَمَا یَسْتَحِقُّهُ حَمْدا کَثِیرا وَ أَعُوذُ بِهِ مِنْ شَرِّ نَفْسِی إِنَّ النَّفْسَ لَأَمَّارَةٌ بِالسُّوءِ اِلّا مَا رَحِمَ رَبِّی وَ أَعُوذُ بِهِ مِنْ شَرِّ الشَّیْطَانِ الَّذِی یَزِیدُنِی ذَنْبا إِلَی ذَنْبِی وَ أَحْتَرِزُ بِهِ مِنْ کُلِّ جَبَّارٍ فَاجِرٍ وَ سُلْطَانٍ جَائِرٍ وَ عَدُوٍّ قَاهِرٍ اللهُمَّ اجْعَلْنِی مِنْ جُنْدِکَ فَإِنَّ جُنْدَکَ هُمُ الْغَالِبُونَ وَ اجْعَلْنِی مِنْ حِزْبِکَ فَإِنَّ حِزْبَکَ هُمُ الْمُفْلِحُونَ.

وَ اجْعَلْنِی مِنْ أَوْلِیَائِکَ فَإِنَّ أَوْلِیَاءَکَ لا خَوْفٌ عَلَیْهِمْ وَ لا هُمْ یَحْزَنُونَ اللهُمَّ أَصْلِحْ لِی دِینِی فَإِنَّهُ عِصْمَةُ أَمْرِی وَ أَصْلِحْ لِی آخِرَتِی فَإِنَّهَا دَارُ مَقَرِّی وَ إِلَیْهَا مِنْ مُجَاوَرَةِ اللِّئَامِ مَفَرِّی وَ اجْعَلِ الْحَیَاةَ زِیَادَةً لِی فِی کُلِّ خَیْرٍ وَ الْوَفَاةَ رَاحَةً لِی مِنْ کُلِّ شَرٍ اللهُمَّ صَلِّ عَلَی مُحَمَّدٍ خَاتَمِ النَّبِیِّینَ.

وَ تَمَامِ عِدَّةِ الْمُرْسَلِینَ وَ عَلَی آلِهِ الطَّیِّبِینَ الطَّاهِرِینَ وَ أَصْحَابِهِ الْمُنْتَجَبِینَ وَ هَبْ لِی فِی الثُّلَثَاءِ ثَلاثا لا تَدَعْ لِی ذَنْبا اِلّا غَفَرْتَهُ وَ لا غَمّا اِلّا أَذْهَبْتَهُ وَ لا عَدُوّا اِلّا دَفَعْتَهُ بِبِسْمِ اللهِ خَیْرِ الْأَسْمَاءِ بِسْمِ اللهِ رَبِّ الْأَرْضِ وَ السَّمَاءِ أَسْتَدْفِعُ کُلَّ مَکْرُوهٍ أَوَّلُهُ سَخَطُهُ وَ أَسْتَجْلِبُ کُلَّ مَحْبُوبٍ أَوَّلُهُ رِضَاهُ فَاخْتِمْ لِی مِنْکَ بِالْغُفْرَانِ یَا وَلِیَّ الْإِحْسَانِ ۔ (۲)

منگل کے دن کی خاص تسبیح

بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمنِ الرَّحِیمِ

سُبْحانَ مَنْ هُوَ فی عُلُوِّهِ دانٍ، سُبْحانَ مَنْ هُوَ فی دُنُوِّهِ عالٍ، سُبْحانَ مَنْ هُوَفی اِشْراقِهِ مُنیرٌ، سُبْحانَ مَنْ هُوَ فی سُلْطانِهِ قَوِیٌّ، سُبْحانَ الْحَلِیمِ جَمیلَ.

سُبْحانَ الْغِنَیِّ الْحَمِیدِ، سُبْحانَ الْوَاسِعِ الْعَلِیِّ، سُبْحانَ اللَّهِ وَتَعَالی، سُبْحانَ مَنْریَکْشِفُ الْضُرَّ وَهُوَ الْدَّآئِمُ الصَّمَدُ الْفَرْدُ الْقَدِیمُ، سُبْحانَ مَنْ عَلَافِی الْهَواءِ.

سُبْحانَ الْحَیِّ الرَّفِیعِ، سُبْحانَ الْحَیِّ الْقَیُّومِ، سُبْحانَ الدَّآئِمِ الْبَاقِی الَّذِی لَایَزُولُ، سُبْحانَ الَّذِی لَاتَنْقُصُ خَزَآئِنُهُ، سُبْحانَ مَنْ لَا یَنْفَدُمَا عِنْدَهُ.

سُبْحانَ مَنْ لَا تَبِیدُ مَعَالِمُهُ، سُبْحانَ مَنْ لَایُشَاوِرُ فِی أَمْرِهِ أَحَداً، سُبْحانَ مَنْ لَا الهَ غَیْرُهُ. سُبْحانَ اللَّهِ الْعَظِیم، سُبْحانَ اللَّه وَبِحَمْدِهِ.

سُبْحانَ ذِی الْعِزِّ الشَّامِخِ الْمُبِینِ، سُبْحانَ ذِی الجَلالِ الْبَاذِخِ الَعَظِیمِ، سُبْحانَ ذِی الجَلالِ الْفَاخِرِ الْقَدِیمِ، سُبْحانَ مَنْ هُوَ فِی عُلُوِّهِ دَانٍ وَفِی دُنوِّهِ عَالٍ وَ فی اِشْراقِهِ مُنیرٌ وَ فی سُلْطانِهِ قَوِیٌّ.

وَفِی مُلْکِهِ دَآئِمِ، وَصَلَّی اللَّهُ عَلَی رَسُولِهِ سَیِّدَنا مُحَمَّدٍ نَبِیَّهِ وَأَهْلِ بَیْتِهِ الطَّاهِرِینَ. (۳)

مخصوص ذکر

دعا اور اعمال کی کتابوں میں اس دن کا مخصوص ذکر «یا ارحم الراحمین» نقل کیا گیا ہے ۔

حضرت زین العابدین ، امام محمد باقر اور امام جعفر صادق علیہم السلام کی زیارت

السَّلامُ عَلَیْکُمْ یَا خُزَّانَ عِلْمِ اللّٰهِ، السَّلامُ عَلَیْکُمْ یَا تَرَاجِمَةَ وَحْىِ اللّٰهِ، السَّلامُ عَلَیْکُمْ یَا أَئِمَّةَ الْهُدَىٰ، السَّلامُ عَلَیْکُمْ یَا أَعْلامَ التُّقىٰ، السَّلامُ عَلَیْکُمْ یَا أَوْلادَ رَسُولِ اللّٰهِ، أَنَا عَارِفٌ بِحَقِّکُمْ، مُسْتَبْصِرٌ بِشَأْنِکُمْ، مُعادٍ لِأَعْدائِکُمْ، مُوَالٍ لِأَوْلِیَائِکُمْ، بِأَبِى أَنْتُمْ وَأُمِّى، صَلَواتُ اللّٰهِ عَلَیْکُمْ. اللّٰهُمَّ إِنِّى أَتَوالىٰ آخِرَهُمْ کَمَا تَوالَیْتُ أَوَّلَهُمْ، وَأَبْرَأُ مِنْ کُلِّ وَلِیجَةٍ دُونَهُمْ، وَأَکْفُرُ بِالْجِبْتِ وَالطَّاغُوتِ وَاللَّاتِ وَالْعُزَّىٰ. صَلَوَاتُ اللّٰهِ عَلَیْکُمْ یَا مَوالِىَّ وَرَحْمَةُ اللّٰهِ وَبَرَکاتُهُ. السَّلامُ عَلَیْکَ یَا سَیِّدَ الْعَابِدِینَ وَسُلالَةَ الْوَصِیِّینَ، السَّلامُ عَلَیْکَ یَا بَاقِرَ عِلْمِ النَّبِیِّینَ، السَّلامُ عَلَیْکَ یَا صَادِقاً مُصَدَّقاً فِى الْقَوْلِ وَالْفِعْلِ، یَا مَوالِىَّ هٰذَا یَوْمُکُمْ وَهُوَ یَوْمُ الثُّلَثَاءِ، وَأَنَا فِیهِ ضَیْفٌ لَکُمْ وَمُسْتَجِیرٌ بِکُمْ، فَأَضِیفُونِى وَأَجِیرُونِى بِمَنْزِلَةِ اللّٰهِ عِنْدَکُمْ وَآلِ بَیْتِکُمُ الطَّیِّبِینَ الطَّاهِرِینَ.

منگل کے دن کا خاص استغفار

بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمنِ الرَّحِیمِ‏

أُعِیذُ نَفْسِی بِاللَّهِ الْأَکْبَرِ رَبِّ السَّمَاوَاتِ الْقَائِمَاتِ بِلَا عَمَدٍ وَ بِالَّذِی خَلَقَهَا (فِی یَوْمَیْنِ‏) وَ قَضَی‏ (فِی کُلِّ سَماءٍ أَمْرَها) وَ (خَلَقَ الْأَرْضَ فِی یَوْمَیْنِ) (وَ قَدَّرَ فِیها أَقْواتَها) وَ جَعَلَ فِیهَا جِبِالًا أَوْتَاداً وَ جَعَلَهَا (فِجاجاً سُبُلًا) وَ أَنْشَأَ السَّحَابَ وَ سَخَّرَهُ وَ أَجْرَی الْفُلْکَ وَ (سَخَّرَ الْبَحْرَ) وَ جَعَلَ فِی الْأَرْضِ‏ (رَواسِیَ وَ أَنْهاراً) مِنْ شَرِّ مَا یَکُونُ فِی اللَّیْلِ وَ النَّهَارِ وَ تُعْقَدُ عَلَیْهِ الْقُلُوبُ وَ تَرَاهُ الْعُیُونُ مِنَ الْجِنِّ وَ الْإِنْسِ کَفَانَا اللَّهُ کَفَانَا اللَّهُ کَفَانَا اللَّهُ لَا إِلَهَ إِلَّا اللَّهُ مُحَمَّدٌ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّی اللَّهُ عَلَیْهِ وَ آلِهِ الطَّاهِرِینَ وَ سَلَّمَ تَسْلِیماً. (۴)   

استخاره دیکھنا

محدّث کاشانی اپنی کتاب «تقویم المحسنین» میں قران کریم سے استخارہ دیکھنے کے حوالے سے ہفتے کے ایام اور وقت (گھڑی) کا تذکرہ کرتے ہوئے تحریر فرماتے ہیں کہ اگر چہ اس سلسلہ میں کوئی حدیث نقل نہیں ہوئی ہے مگر اہل نظر اور ایمان ، منگل کے دن چاشت کے وقت سے لیکر ظھر تک اور عصر کے ہنگام سے لیکر عشاء تک ، استخارہ کا مناسب وقت جانتے ہیں ۔ (۵)

دعائے توسل پڑھنا

شیعہ مسلمان معمولا منگل کی شب مسجدوں ، اماموں کے حرم اور حتی گھروں میں، انفرادی یا گروہی طور سے دعائے توسل پڑھا کرتے ہیں ۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
حوالہ:
۱: مفاتیح الجنان، شیخ عباس قمی، نماز‌های ایام هفته
۲: صحیفه سجادیه؛ دعاهای ایام هفته
۳: البلد الامین، کفعمی، ذکر تسابیح الایام
۴: پایگاه موسسه تحقیقات و نشر معارف اهل بیت (ع)
۵: مفاتیح الجنان، شیخ عباس قمی، ساعات استخاره

Add new comment

Plain text

  • No HTML tags allowed.
  • Web page addresses and e-mail addresses turn into links automatically.
  • Lines and paragraphs break automatically.
7 + 2 =
Solve this simple math problem and enter the result. E.g. for 1+3, enter 4.
ur.btid.org
Online: 60