پہلی ماہ مبارک رمضان کے اعمال اور دعائیں

Thu, 03/23/2023 - 15:02

روایت میں ہے کہ رسول اسلام صلی اللہ علیہ و الہ وسلم ماہ مبارک رمضان کا چاند دیکھنے کے بعد یہ دعا پڑھا کرتے تھے : اللهُمَّ أَهِلَّهُ عَلَیْنَا بِالْأَمْنِ وَ الْإِیمَانِ وَ السَّلامَةِ وَ الْإِسْلامِ وَ الْعَافِیَةِ الْمُجَلَّلَةِ وَ دِفَاعِ الْأَسْقَامِ وَ الرِّزْقِ الْوَاسِعِ‏ وَ الْعَوْنِ عَلَى الصَّلاةِ وَ الصِّیَامِ وَ الْقِیَامِ وَ تِلاوَةِ الْقُرْآنِ اللهُمَّ سَلِّمْنَا لِشَهْرِ رَمَضَانَ وَ تَسَلَّمْهُ مِنَّا وَ سَلِّمْنَا فِیهِ حَتَّى یَنْقَضِیَ عَنَّا شَهْرُ رَمَضَانَ وَ قَدْ عَفَوْتَ عَنَّا وَ غَفَرْتَ لَنَا وَ رَحِمْتَنَا ۔

ماہ مبارک رمضان کی پہلی شب میں چار رکعت نماز ہے جس کی ہر رکعت میں سورۂ حمد کے بعد پندرہ مرتبہ سورہ توحید پڑھے ۔

روزہ کی نیت کے لئے زبان سے کہنا اور ذھن میں دھرانا ضروری نہیں ہے لیکن اگر دل کرے تو رات کو سونے سے پہلے یوں روزے کی نیّت کرے : نَوَیْتُ أَنْ أصُومَ غَداً لِلّٰهِ تعالىٰ (وَاجِبْ) قُرْبَةً إلىٰ اللّٰه ۔ اور صبح یوں روزے کی نیّت کرے ۔ نَوَیْتُ أَنْ أصُومَ ألْيَوْمَ لِلّٰهِ تَعَالىٰ (وَاجِبْ) قُرْبَةً إلىٰ اللّٰه ۔ نیز اگر پورے مہینہ کی نیّت کرنا چاہے تو یوں نیت کرے : نَوَیْتُ أَنْ أصُومَ فِيْ شَهْرِ رَمْضَانْ لِلّٰهِ تَعَالىٰ (وَاجِبْ) قُرْبَةً إلىٰ اللّٰه ۔

سحر کے وقت کی دعاء کو پڑھے

یَا مَفْزَعِی عِنْدَ کُرْبَتِی وَ یَا غَوْثِی عِنْدَ شِدَّتِی إِلَیْکَ فَزِعْتُ وَ بِکَ اسْتَغَثْتُ وَ بِکَ لُذْتُ لا أَلُوذُ بِسِوَاکَ وَ لا أَطْلُبُ الْفَرَجَ اِلّا مِنْکَ فَأَغِثْنِی وَ فَرِّجْ عَنِّی یَا مَنْ یَقْبَلُ الْیَسِیرَ وَ یَعْفُو عَنِ الْکَثِیرِ اقْبَلْ مِنِّی الْیَسِیرَ وَ اعْفُ عَنِّی الْکَثِیرَ إِنَّکَ أَنْتَ الْغَفُورُ الرَّحِیمُ اللهُمَّ إِنِّی أَسْأَلُکَ إِیمَانا تُبَاشِرُ بِهِ قَلْبِی وَ یَقِینا حَتَّى أَعْلَمَ أَنَّهُ لَنْ یُصِیبَنِی اِلّا مَا کَتَبْتَ لِی وَ رَضِّنِی مِنَ الْعَیْشِ بِمَا قَسَمْتَ لِی یَا أَرْحَمَ الرَّاحِمِینَ یَا عُدَّتِی فِی کُرْبَتِی وَ یَا صَاحِبِی فِی شِدَّتِی وَ یَا وَلِیِّی فِی نِعْمَتِی وَ یَا غَایَتِی فِی رَغْبَتِی أَنْتَ السَّاتِرُ عَوْرَتِی وَ الْآمِنُ رَوْعَتِی وَ الْمُقِیلُ عَثْرَتِی فَاغْفِرْ لِی خَطِیئَتِی یَا أَرْحَمَ الرَّاحِمِینَ ۔

افطار کے وقت اس دعاء کو پڑھے : اَلْلّٰھُمَّ لَکَ صُمْتُ وَعَلیٰ رِزْقِکَ اَفْطَرْتُ وَعَلَیْکَ تَوَکَّلْتُ ۔

روایت کے مطابق ماہِ رمضان المبارک کی ہر شب میں اِس دعا کو پڑھنے سے چالس سال کے گناہ بخش دیئے جاتے ہیں اور حاجیوں کی فہرست میں اس کا نام لکھ دیا جاتا ہے اور وہ دعا یہ ہے:

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِیْمِ ، اَلْلّٰھُمَّ رَبَّ شَھْرِ رَمْضَانَ اَلَّذِي اَنْزَلْتَ فِیْهِ الْقُرْاٰنَ وَافْتَرَضْتَ عَلیٰ عِبٰادِکَ فِیْهِ الصِّیٰامَ صَلِّ عَلیٰ مُحَمَّدٍ وَّآلِ مُحَمَّدٍ وَارْزُقْنِيْ حَجَّ بَیْتِکَ الْحَرٰامِ فِی عٰامِيْ ھَذٰا وَ فِي کُلِّ عٰامٍ وَاغْفِرْلِي تِلْکَ الذُّنُوبَ الْعِظٰامَ فَاِنَّه لٰا یَغْفِرُھٰا غَیْرُکَ یٰارَحْمٰنُ یٰاعلَّامُ ..

زاد المعاد میں لکھا ہے کہ ہر نمازِ واجب کے بعد اِس دعا کا پڑھنا بہت مفید ہے، رَسُولِ أکرم صَلیٰ اللّٰہ علیہ وَ آلہ وسَّلم نے فرمایا کہ جو شخص اس دعا کو ماہ مبارک رمضان میں ہر واجب نماز کے بعد پڑھے گا تو خداوند عالم اُس کے قیامت تک کے گناہوں کا کفارہ قرار دے گا اور وہ دعا یہ ہے ۔

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِیْمِ

یٰاعَلِیُّ یٰاعَظیْمُ یٰاغَفُوْرُ یٰارَحَیمُ اَنْتَ الرَّبُ الْعَظِیمُ الَّذِي لَیْسَ کَمِثْلِهٖ شَیْئ وَھُوَالسَّمِیْعُ الْبَصِیْرُ وَ ھَذٰا شَھْرُ عَظَّمْتَهُ وَکَرَّمْتَهُ وَ شَرَّفْتَهُ وَ فَضَّلْتَهُ عَلَیٰ الْشُّھُوْرِ وَ ھَوَالْشَّھْرُ الَّذِی فَرَضْتَ صِیٰامَهُ عَلَیَّ وَھُوَ شَھْرُ رَمْضٰانَ اَلَّذِي اَنْزَلْتَ فِیْهِ الْقُرّٰاٰنَ ھُدَیً لِلنَّاسِ وَ بَیِّنٰاتٍ مِنَ الْھُدیٰ وَالْفُرْقٰانِ وَجَعَلْتَ فِیْهِ لَیْلَةَ الْقَدْرِ وَجَعَلْتَھٰا خَیْرَاً مِنْ اَلْفِ شَھْرٍ فَیٰاذَالْمَنِّ وَلاٰیُمَنُّ عَلَیْکَ مُنَّ عَلَیَّ بِفَکٰاکِ رَقَبَتِي مِنَ الْنّٰارِ فِیْمَنْ تَمُنُّ عَلَیْهِ وَاَدْخِلْنِي الْجَنَّةَ بِرَحْمَتِکَ یٰآ اَرْحَمَ الْرَّاحِمِیْنَ .

سید ابن طاؤس نے حضرت اِمام جعفرصادق علیہ السلام و حضرت امام موسی کاظم علیہ السلام سے نقل کیا ہے کہ اَوَّلِ ماہِ رمضان سے آخری ماہِ رمضان تک ہر واجب نماز کے بعد جو اِس دعا کو پڑھے گا الله اس کی دنیاوی و اُخروی تمام دلی مرادیں پوری فرمائے گا اور وہ دعاء یہ ہے :

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِیْمِ

اَللّٰھُمَّ اَدْخِلْ عَلیٰ اَھْلِ الْقُبُوْرِ الْسُّرُوْرِ اَللّٰھُمَّ اَغْنِ کُلَّ فَقِیْرٍ اَللّٰھُمَّ اَشْبِعْ کُلَّ جَائِعٍ اَللّٰھُمَّ اکْسُ کُلَّ عُرْیٰانٍ اَللّٰھُمَّ اقْضِ دَیْنَ کُلَِّ مَدِینٍ اَللّٰھُمَّ فَرِّجْ عَنْ کُلِّ مَکْرُوبٍ اَللّٰھُمَّ رُدَّ کُلَّ غَرِیبٍ اَللّٰھُمَّ فُکَّ کُلَّ اَسِیرٍ اَللّٰھُمَّ اَصْلِحْ کُلَّ فٰاسِدٍ مِنْ اُمُورِ الْمُسْلِمینَ اَلْلّٰھُمَّ اشْفِ کُلَّ مَرِیضٍ اَللّٰھُمَّ سُدَّ فَقْرَنٰا بِغِنٰاکَ اَلْلّٰھُمَّ غَیِّرْسُوئَ حٰالِنٰا بِحُسْنِ حٰالِکَ اَلْلّٰھُمَّ اقْضِ عَنَّاالدَّیْنَ وَ اَغْنِنٰا مِنَ الْفَقْرِ اِنَّکَ عَلیٰ کُلِّ شَیئٍ  قَدِیْر

امام جعفر صادق علیہ السّلام سے نقل ہے کہ اپ أوَّلِ ماہِ رمضان میں یہ دعاء پڑھنے کو کہا:

اللهُمَّ قَدْ حَضَرَ شَهْرُ رَمَضَانَ وَ قَدِ افْتَرَضْتَ عَلَیْنَا صِیَامَهُ وَ أَنْزَلْتَ فِیهِ الْقُرْآنَ هُدًى لِلنَّاسِ وَ بَیِّنَاتٍ مِنَ الْهُدَى وَ الْفُرْقَانِ اللهُمَّ أَعِنَّا عَلَى صِیَامِهِ وَ تَقَبَّلْهُ مِنَّا وَ سَلِّمْنَا فِیهِ وَ سَلِّمْنَا مِنْهُ وَ سَلِّمْهُ لَنَا فِی یُسْرٍ مِنْکَ وَ عَافِیَةٍ إِنَّکَ عَلَى کُلِّ شَیْ‏ءٍ قَدِیرٌ یَا رَحْمَانُ یَا رَحِیمُ ۔

Add new comment

Plain text

  • No HTML tags allowed.
  • Web page addresses and e-mail addresses turn into links automatically.
  • Lines and paragraphs break automatically.
6 + 11 =
Solve this simple math problem and enter the result. E.g. for 1+3, enter 4.
ur.btid.org
Online: 55